کورونا،بیروزگاری، مہنگائی، تعلیمی پسماندگی، بیماری، لوڈ شیڈنگ، عوام کیا کرے؟

رحیم یار خان (آج تک) کورونا،بیروزگاری، مہنگائی، تعلیمی پسماندگی، بیماری، لوڈ شیڈنگ، عوام کیا کرے؟

کورونا وائرس کی وجہ سے جہاں بیروزگاری میں اضافہ ہوا ہے وہاں

کاروبار زندگی بھی مفلوج ہو کر رہ گئی ہے۔ تیز دھوپ اور گرمی کی

وجہ سے عوام گھروں میں محصور ہو کر رہ گئے ہیں۔ صارفین کی تعداد

کم ہونے کی وجہ سے کاروبار ٹھپ ہو کر رہ گئے ہیں دوسری جانب

جزوی اور اسمارٹ لاک ڈائون کی وجہ سے مہنگائی کا طوفان برپا ہو

گیا ہے۔ ادھر تعلیمی اداروں میں کورونا کے باعث چھٹیوں کی وجہ

سے تعلیمی پسماندگی میں اضافہ ہو رہا ہے۔ سرکاری ہسپتالوں کی

ایمرجنسی اور آئوٹ ڈور میں مریضوں  کی تعداد نہ ہونے کے برابر رہ

گئی ہے۔ شعبہ صحت کے حوالے سے مختلف افواہوں کی وجہ سے

عام آدمی تک نے سرکاری ہسپتالوں سے منہ موڑتے ہوئے

پرائیویٹ ہسپتال، حکما اور اتائیوں کا رخ کر لیا ہے۔ تعلیمی اداروں کی

بندش کے باوجود لوڈ شیڈنگ کے اژدھے نے غریب عوام کو پسینے

میں شرابور کر دیا ہے۔ کورونا وائرس، بیروزگاری، مہنگائی، تعلیمی

پسماندگی، بیماری، لوڈ شیڈنگ سے ستائی عوام حکومت، عدلیہ اور

انتظامیہ کی طرف دیکھ رہی ہے کہ وہ ان تمام مسائل کو کب حل

کریں گے اور وہ کب خوشحال زندگی گزاریں گے؟

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
ہمارے ساتھ رابطہ کریں
Close
Close