سربراہ کرپشن کرے تو ملک تباہ ہو جاتا ہے، وزیراعظم عمران خان

اسلام آباد(آج تک)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان میں خاندانی طرز کی سیاست چلتی آئی ہے۔ یہ لوگ کہتے ہیں کہ ہم جتنی مرضی چوری کرلیں ہم جوابدہ نہیں ہیں۔جمہوریت میں وزیراعظم جوابدہ ہوتا ہے یہ جمہوریت نہیں بادشاہت ہے۔

اپوزیشن کا صرف ایک ہی مطالبہ ہے کہ این آر او دیا جائے لیکن میں کسی ایک آدمی کو بھی میں این آر او نہیں دوں گا۔ میں نے کسی سے کوئی استعفیٰ نہیں مانگا، ندیم افضل چن نے استعفا دیا ان کی اپنی وجوہات ہوں گی کیونکہ میں نے ندیم افضل چن کو کبھی نہیں کہا کہ استعفا دیں۔

وزیراعظم عمران خان نے نجی ٹو وی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ ترقی کرنے والی قوموں نے دوسروں کے تجربات سے سیکھا، امریکا میں نئی حکومت کو اداروں کے بارے میں پہلے ہی بتادیا جاتا ہے.

نئی حکومت کو اقتدار میں آنے سے پہلے ترجیحات کا پتہ ہوتا ہے لیکن ہمیں اقتدارمیں آنے کے بعداداروں کا پتہ چلتا ہے۔وزیراعظم کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم کی ساری تحریک این آراو لینے کیلئے ہے۔

انہوں نے مجھ سے تحریری طور پر این آراو مانگا جبکہ فیٹف کے معاملے پر بھی 34 ترامیم کے ذریعے این آراو مانگا گیا۔ جمہوریت نےمیرٹ، قانون کی بالادستی کی وجہ سے بادشاہت کوشکست دی۔

اپوزیشن کا صرف ایک ہی مطالبہ ہے کہ این آر او دیا جائے لیکن میں کسی ایک آدمی کو بھی میں این آر او نہیں دوں گا۔ مشرف نے گھٹنےٹیک دیئے تھے لیکن میں این آر او نہیں دوں گا۔ واحد سیاستدان ہوں جو جی ایچ کیو کی نرسری میں نہیں پلا۔

ذوالفقار علی بھٹو بھی آٹھ سال آمر کی کابینہ میں رہے۔انہوں نے کہ کہا کہ فضل الرحمان کو مولانا کہنا جرم ہے وہ کہتے ہیں میں جواب دہ نہیں لیکن مولانا فضل الرحمان کی جائیدادیں سامنے آرہی ہیں تو مولانا بتائیں اربوں کی یہ جائیدادکہاں سے آئی؟۔

وزیراعظم نے کہا کہ ہمارا آدھا ٹیکس قرضوں کی قسطوں میں چلا جاتا ہے۔ دو ہزار آٹھ سے دو ہزار اٹھارہ تک ملک کا ہر ادارہ تباہ ہو چکا ہے۔

اصلاحات کا عمل تکلیف دہ ہوتا ہے اور جب اصلاحات کرتے ہیں تو یہ سارے چور صورتحال سے فائدہ اٹھانے کے لیئے ایک ہو جائے ہیں۔

وزیراعظم نے الیکشن کمیشن سے فارن فنڈنگ تحقیقات پبلک کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ن لیگ، پی ٹی آئی، پی پی کی فارن فنڈنگ تحقیقات کوپبلک کیا جائے۔

چیلنج کرتا ہوں ان دونوں پارٹیوں کو بڑی بھاری فنڈنگ ہوئی جبکہ پی ٹی آئی کوفنڈنگ کرنے والے 40 ہزار افراد کی تفصیلات موجود ہیں۔

وزیراعظم عمران خان کا مزید کہنا تھا کہااگر کسی ملک کا وزیراعظم کرپشن کرتا ہے تو ملک تباہ ہوجاتا ہے اور جب تک حکمران جوابدہ نہیں ہوگا ملک ترقی نہیں کرسکتا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
ہمارے ساتھ رابطہ کریں