خواتین کی نازیبا تصاویر اور حادثوں میں مرنے والوں کی تصاویر کھینچنا جرم قرار

برلن (آج تک ) جرمنی میں خواتین کی نازیبا تصاویر اور حادثوں میں مرنے والوں کی تصاویر کھینچنا

جرم قرارجرمنی کی وفاقی کابینہ نے ایک ایسا قانونی بل منظور کر لیا ہے جس میں خفیہ طور پر

خواتین کے جسمانی اعضا کی تصاویر کھینچنے کو جرم قرار دے دیا گیا ہے۔

حادثوں میں ہلاک ہونے والوں کی تصاویر لینا بھی قابل سزا جرم ہو گا۔اپ سکرٹنگ‘ یعنی خواتین

کی مرضی کے بغیر اسکرٹ یا کپڑوں کے نیچے خفیہ طور پر نازیبا تصاویر کھینچنا اب جرمنی میں

قابل سزا جرم ہو گا۔جرمنی کی وفاقی کابینہ نے بدھ کے روز وفاقی کابینہ سے منظور کردہ قانونی

بل میں اپ سکرٹنگ کے ساتھ ساتھ حادثوں میں ہلاک ہونے والے افراد کی تصاویر کھینچنے کے عمل

کو بھی جرم قرار دیا گیا ہے۔ اس عمل کو ʼربر نیکنگ‘ کہا جاتا ہے

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
ہمارے ساتھ رابطہ کریں
Close
Close