رحیم یار خان: 4 شوگر ملز، مارکیٹ میں چینی 80 روپے فی کلو فروخت

رحیم یار خان (آج تک) رحیم یار خان: 4 شوگر ملز، مارکیٹ میں چینی 80 روپے فی کلو فروخت۔

صوبہ پنجاب کا آخری ضلع رحیم یار خان جو کچھ عرصہ پہلے کپاس (پھٹی) کے لحاظ سے

چاندی کا ضلع سمجھا جاتا تھا جہاں بعد ازاں 4 شوگر ملز کے قیام سے گنے کی پیداوار

عروج پر پہنچ گئی۔ گذشتہ دنوں سپریم کورٹ کے چیف جسٹس گلزار احمد نے

شوگر ملز ایسوسی ایشن کی اپیل پر چینی کے متنازع ریٹ پر حکومت کو نوٹس جاری

کرتے ہوئے شوگرملز ایسوسی ایشن کو 10 دن کے لئے عام آدمی کو 70 روپے فی کلو

چینی کی فراہمی کے احکامات جاری کئے۔ بعد ازاں 13 جون کو چیف سیکرٹری پنجاب

نے بھی ڈپٹی کمشنرز کو 70 روپے فی کلو چینی عام صارف کو فراہم کرنے کی ہدایت

کی۔ جس کے نتیجے میں شوگر ملز نے چند ایک سٹال لگا کر عوام کو 70 روپے فی کلو

چینی کی فراہمی شروع کر دی لیکن مارکیٹ میں چینی کے ریٹ کم ہونے کی بجائے

80 روپے فی کلو تک پہنچ گئے۔ دکانداروں کا کہنا ہے کہ بجٹ سے پہلے چینی 50 کلو کا

تھیلا 3800 روپے میں ملتا تھا جبکہ بجٹ کے بعد تھیلے کی قیمت 3900 روپے تک پہنچ

گئی ہے۔ ادھر کورونا وائرس کی وجہ سے ملک کی غریب عوام اور دیہاڑی دار ملازمین

بیروزگار ہو چکے ہیں اور فاقہ کشی کی زندگی گزارنے پر مجبور ہیں۔ اس صورتحال میں

سپریم کورٹ اور حکومت کو کورونا وائرس کی چکی میں پھنسی غریب عوام کے لئے

خصوصی اقدامات کرنے چاہئیں۔

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
ہمارے ساتھ رابطہ کریں
Close
Close